Articles

بلیک واٹر پڑوس تک آگئی ‘ میں خوفزدہ نہیں‘ ڈاکٹر

In پاکستان on ستمبر 30, 2009 by ابو سعد Tagged:

کراچی (انٹرویو۔ طارق حبیب)ڈاکٹر عبدالقدیر خان نے کہا ہے کہ بلیک واٹر والے میرے پڑوس میں آچکے ہیں مگر میں ان سے نہیں ڈرتا۔حکمران بے حس ہیں میرے قتل پر صرف قوم سے معافی مانگیں گے۔ جلد بہت سے انکشافات کروں گا۔کوئٹہ پر حملے کی باتیں پاکستان کو بلیک میل کرنے کے لئے کی جارہی ہیں۔ ان خیالات کا اظہار قوم کے ہیرو اور معروف ایٹمی سائنسدان ڈاکٹر عبدالقدیر خان نے ٹیلی فون پر جسارت سے بات چیت کرتے ہوئے کیا ۔ انہوں نے کہاکہ وہ امریکا ، ڈرون حملوں اور بلیک واٹر سے نہیں ڈرتے ۔بلیک واٹر کے اہلکار ان کے پڑوس میں آگئے ہیں اورانہیں اور ان کے اہل خانہ کو خوفزدہ کرنے کی کوششیں کرتے ہیں تاہم انہیں کسی بات کا ڈر نہیں ہے۔ انہوں نے کہا کہ اگرانہیں قتل بھی کردیا گیا تو حکمران قوم سے معافی مانگنے کے علاوہ کچھ نہیں کریں گے جبکہ چار دن اخبارات میں خبریں شائع ہوں گی اور اس کے بعد معاملہ ختم ہوجائے گا۔ ڈاکٹر عبدالقدیر خان نے کہا کہ اگر زندگی نے موقع دیا تو جلد عوام کے سامنے انتہائی اہم انکشافات کروں گا جس سے بہت سے چہرے بے نقاب ہونگے اور اہم معاملات منظر عام پر آئینگے۔ انہوں نے مزید کہا کہ وزیر داخلہ رحمن ملک ضیاءالحق کے دور کی پیداوار ہے ۔ ایک سوال کے جواب میں انہوں نے کہاکہ مشرف کا ٹرائل عوامی امنگوں کی ترجمانی ہوگا مگر حکمران ایسا نہیں کریں گے۔ لال مسجد اور اکبر بگٹی قتل کے حوالے سے مشرف کا ٹرائل ضرور ہونا چاہئے۔ انہوںنے انکشاف کیا کہ بلیک واٹر نے پہلے بھی پاکستان میں سیٹ اپ قائم کرنے کی کوشش کی تھی تاہم حساس اداروں نے یہ کوشش ناکام بنادی تھی اور اس نیٹ ورک کوتوڑ دیا تھا۔ تاہم امریکا نے ناکامی کے بعد کوئٹہ پر ڈرون حملوں کا شوشا چھوڑ کر حکمرانوں کو بلیک میل کرنا شروع کردیا جس سے بزدل حکمران امریکی بلیک میلنگ میں آگئے ۔ موجودہ حکومت بے بس ہے اور کچھ نہیں کرسکتی ۔ جسارت کی جانب سے کئے گئے سوال کے جواب میں انہوں نے کہا کہ کیری لوگر بل کے مضمرات صرف صدر زرداری کے علم میں تھے اور اس حوالے سے صدر کی جانب سے کسی ادارے کو بھی اعتماد میں نہیں لیا گیا تھا۔ اس بل پر پارلیمنٹ میں بحث ہونی چاہیے۔ انہوں نے مزید کہا کہ فرینڈز آف پاکستان کا راگ الاپنے والے پہلے خود پاکستان کے فرینڈز بن جائیں پھر کوئی دوسری بات کریں۔ ورنہ حالات بہتر نہیں ہونگے۔ انہوں نے کہاکہ ہم نے ذولفقار علی بھٹو کے ساتھ مل کر “روکھی سوکھی کھائیں گی، ایٹم بنائیں گی”کا نعرہ لگایا تھامگر آ ج کھانے کے لئے روکھی سوکھی بھی میسر نہیں ہے اور حکمران عیاشیوں میں مصروف ہیں۔ ڈاکٹر عبدالقدیر خان نے کہاکہ امریکا کو ہماری ایٹمی ٹیکنالوجی کی فکر چھوڑ دینی چاہیے کیونکہ ہماری ایٹمی ٹیکنالوجی محفوظ ہے ۔ امریکہ صرف بلیک میل کرنے کے لئے اس طرح کا پروپیگنڈا کرتا ہے ۔

جواب دیں

Fill in your details below or click an icon to log in:

WordPress.com Logo

آپ اپنے WordPress.com اکاؤنٹ کے ذریعے تبصرہ کر رہے ہیں۔ Log Out / تبدیل کریں )

Twitter picture

آپ اپنے Twitter اکاؤنٹ کے ذریعے تبصرہ کر رہے ہیں۔ Log Out / تبدیل کریں )

Facebook photo

آپ اپنے Facebook اکاؤنٹ کے ذریعے تبصرہ کر رہے ہیں۔ Log Out / تبدیل کریں )

Google+ photo

آپ اپنے Google+ اکاؤنٹ کے ذریعے تبصرہ کر رہے ہیں۔ Log Out / تبدیل کریں )

Connecting to %s

%d bloggers like this: